بنگلہ دیشی پولیس نے3 مشتبہ عسکریت پسندوں کو گولی مار دی

319

بنگلہ دیشی دارالحکومت ڈھاکا میں پولیس نے3 مشتبہ عسکریت پسندوں کو گولی مار دی، فائرنگ کے تبادلے میں 2 سکیورٹی اہلکار زخمی بھی ہوئے۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق ریپڈ ایکشن بٹالین نامی فورس کے سربراہ بینظیر احمد نے بتایا کہ اس واقعے میں سکیورٹی اہلکاروں نے ڈھاکا میں ایک عمارت میں موجود ان شدت پسندوں کا محاصرہ کر لیا تھا، اور یہ خونریزی اس محاصرے کے بعد شروع ہونے والے فائرنگ کے تبادلے میں ہوئی۔ یہ جگہ ملکی وزیر اعظم شیخ حسینہ کے دفتر سے دور نہیں ہے۔ بتایا گیا ہے کہ اس واقعے کے بعد حکام نے اس مکان سے تینوں عسکریت پسندوں کی لاشوں کے علاوہ متعدد ہتھیار اور گولہ بارود بھی قبضے میں لے لیا۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ