شریف خاندان کا ایون فیلڈ ریفرنس میں تعاون نہ کرنے کا فیصلہ

437
نیو اسلام آباد ائر پورٹ میں 50ارب کی کرپشن ،شریف خاندان سے تعلق رکھنے والے ٹھیکیدار کی گرفتاری متوقع
نیو اسلام آباد ائر پورٹ میں 50ارب کی کرپشن ،شریف خاندان سے تعلق رکھنے والے ٹھیکیدار کی گرفتاری متوقع

لاہور(آن لائن) شریف خاندان نے ایون فیلڈ ریفرنس میں نیب سے تعاون نہ کرنے کا فیصلہ کر لیا۔ سابق وزیراعظم نواز شریف نے نیب کے نوٹس کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ نیب کے
پاس ثبوت ہیں تو احتساب عدالت میں پیش کردے۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق نواز شریف کے لندن دورے کے بعد نیب کی ٹیم نے نواز شریف، کیپٹن (ر) صفدر اور مریم نواز کو نیب عدالت میں پیش ہونے کا نوٹس جاری کیا جس میں کہا گیا کہ کچھ مزید شواہد سامنے آئے ہیں جن کی بنیاد پر ان سے تحقیقات کرنی ہیں، جس پر نواز شریف کی لیگل ٹیم نے انہیں مشورہ دیا کہ ٹرائل آخری مرحلے میں ہے لہٰذا اب کسی تحقیقات کا حصہ بننا مناسب نہیں ہوگا، جس پر شریف خاندان کی جانب سے ایون فیلڈ ریفرنس کا جواب دیتے ہوئے کہا گیا ہے کہ اب نیب سے مزید کوئی تعاون نہیں کیا جائے گا، پیش کی گئی کسی بھی دستاویزات کا جواب عدالت میں دیں گے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ