ریئر ایڈمرل جمیل اختر نے چیئر مین کراچی پورٹ ٹرسٹ کا عہدہ سنبھال لیا

220

کراچی(اسٹاف رپورٹر)ریئر ایڈمرل جمیل اختر ھلال امتیاز (ملٹری) نے جمعرات کو چیئر مین کراچی پورٹ ٹرسٹ کا عہدہ سنبھال لیا۔ان کاامتیاز ہے کہ دوران نیول سروس انہوں نے بطور کمانڈنگ آفیسر پاکستان نیوی سرفیس شپ، پاکستان میرین اینڈاسپیشل فورسز میں روشن خدمات سر انجام دی۔1979میں پاکستان نیوی جوائن کرتے ہی انہوں نے آپریشن برانچ پاکستان نیوی سے جون 1983۱ کمیشن حاصل کیا اس کے بعد انہوں نے اسپیشل آپریشن فورس میں بہت عرصہ تک خدمات سرانجام دیں۔انہوں نے 1989 میںSan Diego California سےUS NAVY SEAL کورس کیا۔ان کی نمایا ں خدمات میں بطور ٹریننگ اینڈ آپریشنز آفیسر، اسپیشل سروسز گروپ (نیوی)، ڈائریکٹنگ ا سٹاف اور اس سے قبل پی این نیوی وار کالج (لاہور) میں بطور چیف انسٹریکٹر ز تعینات رہے۔ اسسٹنٹ چیف آف نیول اسٹاف (ٹریننگ)، نیول ہیڈ کواٹر، چیف اسٹاف آفیسر پاکستان فلیٹ، کمانڈر نارتھ، ڈائریکٹر جنرل نیول انٹیلیجنس ڈپٹی چیف آف نیول اسٹاف (ایڈمن) کے عہدوں پربھی خدمات انجام دی ہیں۔ رئیر ایڈمرل جمیل اختر انڈونیشن کمانڈ اور اسٹاف کالج پی این وار کالج سے گریجویٹ ہیں۔ انہوں نے نیشنل ڈیفنس یونیورسٹی سے آرمڈ فورسس وار کورس 2005 میں مکمل کیا۔ کراچی پورٹ ٹرسٹ میں عہدہ سنبھالنے سے قبل یہ ڈائریکٹر جنرل پاکستان میری ٹائم سیکیورٹی ایجنسی کراچی میں تعینات رہے ہیں۔بطورڈائر یکٹر جنرل پاکستان میری ٹائم سیکورٹی ایجنسی انہوں نے نئی میری ٹائم پالیسی کے نفاذ میں اہم کردار ادا کیا۔اپنے پی ایم ایس اے میں دوران سروس آبی کرائم کی سرکوبی کی اور بہت سے ا سمگلروں کو گرفتار کیا۔ انہوں آبی ماحولیاتی آلودگی کم کرنے میں بھی اہم کردار ادا کیا۔ ان کی نمایاں خدمات کے اعتراف میں انہیں ھلال امتیاز( ملٹری) اور تمغۂ بسالت (جرات) سے نوازا گیا۔ ان کی قابلیت بابت توقع کی جاتی ہے کہ یہ ملک کی اہم اور سب سے بڑی بندرگاہ کو خطہ کی اہم بندرگاہ بننے میں شامل مددگار رہیں گی۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ