نوجوانوں کو نظر انداز کرکے ملک میں مثبت تبدیلی نہیں آسکتی

35

فیصل آباد(وقائع نگار خصوصی ) جماعت اسلامی کے ضلعی امیر سردار ظفرحسین خان ایڈووکیٹ نے کہا ہے کہ نوجوان پاکستان کا قیمتی اثاثہ ہیں ان کو نظر انداز کرکے ملک میں مثبت تبدیلی نہیں لائی جاسکتی۔جے آئی یوتھ نے کم عرصے میں پنجاب سمیت ملک بھر کے نوجوانوں میں خاصی پذیرائی حاصل کی ہے۔ جے آئی یوتھ کے زیر اہتمام منظم انداز میں اہداف کو مدنظر رکھتے ہوئے ہر سطح پر اسپورٹس پروگرامات کو تشکیل دیاجائے گا۔نوجوانوں کو پنجاب بھرمیں متحرک کرنے کے لیے جے آئی یوتھ کے تحت یونین کونسل،زونل،ضلعی،ڈویژنل اور صوبائی سطح پر کرکٹ،فٹ بال،والی بال اور محفل حسن قرآت و نعت کے مقابلوں کا بھی پورے صوبے میں اہتمام کیا جارہا ہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے المرکز الاسلامی چنیوٹ بازار میں جے آئی یوتھ کے ایک وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہاکہ نوجوان طبقہ پاکستان کی کل آبادی کے 60فیصدحصے پر مشتمل ہے۔ نوجوانوں کی حوصلہ افزائی بہت ضروری ہے۔وطن عزیزاس وقت مسائل کی دلدل میں دھنستاچلا جارہاہے۔لوگوں کو ریلیف میسر نہیں۔بہت بڑی تعداد میں پڑھے لکھے نوجوان حالات سے دلبرداشتہ ہوکر حصول روزگار کی تلاش میں بیرون ملک کا رخ کررہے ہیں۔ہمیں نوجوانوں کو کسی بھی موقع پر تنہا نہیں چھوڑنا چاہیے۔انہوں نے کہاکہ ہمارے ملک میں ٹیلنٹ کی کمی نہیں،ضرورت اس امر کی ہے کہ اس کو اجاگر کیا جائے ۔ آج کا نوجوان ہی مستقبل کا بہترین کھلاڑی، سیاستدان اور حکمران ہوگا۔ہمیں نئے اور ایماندار لوگوں کو آگے لانا ہوگا۔پاکستان کی موجودہ سیاست میں اچھی تبدیلی تب ہی آسکتی ہے جب نوجوان آگے بڑھ کر ملکی مسائل حل کرنے میں اپنا کرداراداکریں گے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ