ملکی خسارہ 5ارب ڈالر ہوگیا‘ مہنگائی بڑھے گی‘ اسٹیٹ بینک

98

کراچی (اے پی پی) اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے مانیٹری پالیسی جاری کردی ہے جس میں بتایا گیا ہے کہ جولائی تا اکتوبر مالی سال 18 20ء میں جاری کھاتے کاخسارہ بڑھ کر 5ارب ڈالر ہوگیا جو گزشتہ مالی سال کے اسی عرصے میں2.3ارب ڈالر تھا۔مرکزی بینک کے اعلامیے کے مطابق پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے اور غیر ضروری درآمدی اشیا ء پر ریگولیٹری ڈیوٹی کے نفاذ سے آئندہ مہینوں کے دوران مہنگائی بڑھے گی۔ اعلامیے میں بتایا گیا ہے کہ حکومت کے قرض لینے کے انداز میں نمایاں تبدیلی ہوئی ہے،حکومت اسٹیٹ بینک کے علاوہ جدول(نجی) بینکوں سے بھی رقوم حاصل کررہی ہے۔ مرکزی بینک نے یہ بھی کہا ہے کہ آگے چل کر سی پیک سے متعلقہ منصوبوں پر پیش رفت اور دیگر سرکاری رقوم کی آمد مجموعی توازنِ ادائیگی کے خسارے کو سنبھالنے میں اہم کردار ادا کرے گی، چنانچہ تفصیلی سوچ بچار کے بعد کمیٹی نے شرح سود کو 5.75 فیصد پر برقرار رکھنے کا فیصلہ کیا ہے۔

حصہ