وزیراعظم نے نئی حلقہ بندیوں کی سینیٹ سے منظوری کیلیے پیپلزپارٹی سے مدد مانگ لی

62

اسلام آباد (آن لائن)وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے سینیٹ میں حلقہ بندیوں کے آئینی ترمیم بل کی منظوری کے حوالے سے پیپلزپارٹی سے مدد طلب کرلی ۔ بدھ کو قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف سید خورشید شاہ نے پارلیمنٹ ہاؤس میں صحافیوں سے غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے اسپیکر چیمبر میں مجھ سے 12منٹ ملاقات کی جس میں انہوں نے سینیٹ میں حلقہ بندیوں کے حوالے سے بل کی منظوری کے لییپیپلزپارٹی سے مدد مانگی ہے لیکن میں نے وزیر اعظم کو بتادیا ہے کہ اس حوالے سے میں ان کی کوئی مدد نہیں کرسکتا البتہان کا پیغام اپنی اعلیٰ قیادت تک پہنچا دوں گا جس پر شاہد خاقان عباسی نے رد عمل دیتے ہوئے کہا کہ اس حوالے سے آصف زرداری یا بلاول سے ملاقات یا فون پر رابطے کے لیے بھی تیار ہیں ۔خورشید شاہ نے کہا کہ شاہد خاقان عباسی کا پیغام اعلیٰ قیادت تک پہنچا دیا ہے اب اعلیٰ قیادت ہی سینیٹ میں حکومت کے آئینی ترمیم کے بل کی حمایت یا شاہد خاقان عباسی سے ملاقات کا فیصلہ کرے گی ۔خورشید شاہ نے کہا کہ عمران خان نے انتخابی ایکٹ ترمیمی بل ووٹنگ میں حصہ نہ لے کر نواز شریف کا ساتھ دیا اگر عمران خان وزیر اعظم بن گئے تو ملک کا حال اس سے بھی برا ہوجائے گا ۔

حصہ