نواز شریف عوام کو اکسا کر فساد پھیلانے کی کوشش کررہے ہیں‘ عمران خان

72

اسلام آباد(صباح نیوز)سربراہ پاکستان تحریک انصاف عمران خان نے کہا ہے کہ سابق وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف عوام کو اکسا کر فساد پھیلانے کی کوشش کر رہے ہیں،نوازشریف احتساب کے نام پرعوام کو بے وقوف بنا رہے ہیں،نوازشریف کا عوام کے سامنے احتساب کے لیے پیش ہونے کا دعویٰ آئین کی روگردانی اور فساد برپا کرنے کی کوشش ہے۔بنی گالا اسلام آباد میں سر براہ عوامی مسلم لیگ شیخ رشید سے ملاقات کے موقع پر عمران خان نے کہا کہ نوازشریف مافیا ہر قیمت پر بیرون ملک چھپائے 300ارب بچانا چاہتی ہے،اسی لیے سابق وزیراعظم عدلیہ اور آئین پر حملے کررہے ہیں جس سے ثابت ہوتا ہے کہ ان کے پاس اپنے جرائم کے دفاع میں کہنے کے لیے کچھ نہیں۔عمران خان نے مزید کہا کہ نوازشریف دعویٰ کررہے ہیں کہ عوام ان کا احتساب کریں گے، اس دعویٰ کے ذریعے وہ قوم کو بے وقوف بنانے، آئین کی خلاف ورزی اور فساد برپا کرنے کی کوشش کررہے ہیں، وہ چاہتے ہیں کہ عوام کو ہر وقت بے وقوف بنا کر رکھنا چاہیے لیکن اب یہ ممکن نہیں کیوں کہ عوام بخوبی جانتے ہیں کہ ان کا کام اپنا نمائندہ منتخب کرنا اور قانونی کی عملداری یقینی بنانا ہے جبکہ احتساب کا اصل فریضہ آئینی طور پر عدلیہ کے ذمے ہے۔اس موقع پر شیخ رشید نے کہا کہ حکمرانوں کی کرپشن کے خلاف جدوجہد جاری رہے گی اور آئندہ عام انتخابات کرپشن کی بنیاد پر ہی لڑے جائیں گے اس لیے ہم نے فیصلہ کیا ہے کہ حدیبیہ پیپر کا معاملہ پہلے سے زیادہ بھرپور انداز میں اٹھایا جائے گا۔ علاوہ ازیں بنی گالہ اسلام آباد میں پیر کوپاکستان تحریک انصاف کی قیادت کا اعلیٰ سطحی اجلاس منعقد ہوا۔اجلاس کی صدارت پارٹی سربراہ عمران خان نے کی۔اجلاس میں وفاقی و صوبائی حکومتوں کی جانب سے ارکان اسمبلی میں 200 ارب روپے کی تقسیم پر انتہائی تشویش کا اظہار کیا گیااور عدالت عظمیٰ اور الیکشن کمیشن سے فوری نوٹس کا مطالبہ کیا گیا۔اجلاس میں اس بات پر اتفاق کیا گیا کہ و فاق اورپنجاب حکومت کا ارکان اسمبلی میں 200 ارب کے ترقیاتی فنڈز کی تقسیم نہ صرف ایک سیاسی رشوت ہے بلکہ انتخابات سے قبل قومی خزانے سے بھاری فنڈز کی تقسیم قبل از انتخابات دھاندلی ہے۔ اجلاس میں الیکشن ایکٹ 2017ء کی دفعہ 203 میں ترمیم پر بھی مفصل تبادلہ خیال کے ساتھ ساتھ مردم شماری اور ممکنہ حلقہ بندیوں کے اہم پہلوؤں پر بھی گہرا غور و خوض کیا گیا۔اجلاس کے شرکا نے نواز شریف اور مافیا کی جانب سے اداروں خصوصاً عدلیہ کیخلاف مہم جوئی کی شدید مذمت کرتے ہوئے ملک کو بحرانی کیفیت سے نکالنے کے لیے فوری انتخابات کے انعقاد کا مطالبہ کیا۔اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ ملک کے اندرونی و بیرونی سیاسی حالات کے تقاضے کو مد نظر رکھتے ہوئے فوری طور پر عوام سے رجوع کیا جائے،نیزعوام کے اعتماد اور قومی مینڈیٹ کی حامل حکومت کو پالیسی سازی اور فیصلوں کا اختیار سونپا جائے۔

حصہ