کاروباری ہفتے کے آخری روز پاکستان اسٹاک میں مندی، 300 سے زائد پوائنٹس کی کمی

43
پاکستان اسٹاک

کراچی (اسٹاف رپورٹر ) کاروباری ہفتہ کے آخری دن پاکستان اسٹاک مارکیٹ مندی کی لپیٹ میں آ گئی،300سے زائد پوائنٹس کی کمی سے کے ایس ای100انڈیکس 41700پوائنٹس سے گھٹ کر 41400پوائنٹس کی کم ترین سطح پر بند ہوا جبکہ مارکیٹ میں سرمایہ کاروں کو 71ارب روپے سے زائد کے خسارے کا سامنا رہا جس سے سرمائے کا مجموعی حجم 85کھرب روپے سے گھٹ کر84کھرب روپے رہ گیا ،کاروباری لین دین بھی جمعرات کی نسبت4کروڑشیئرز کم رہا ۔پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں جمعہ کو کاروبار کا آغاز مثبت ہوا ،اور ٹریڈنگ کے دوران انڈیکس41836پوائنٹس کی نئی سطح پر جا پہنچا بعد ازاں منافع خوری کی خاطر فروخت کے دباؤ کے سبب انڈیکس کی الٹی گنتی شروع ہو گئی اور 100انڈیکس 41700،41600اور41500کی پوائنٹس کی3بالائی حد سے گر کر41400پوائنٹس کی پست سطح پر آگیا۔پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں جمعہ کو کاروبار کے اختتام پر کے ایس ای100انڈیکس میں 354.46پوائنٹس کی کمی ریکارڈ کی گئی جس سے انڈیکس 41790.16پوائنٹس سے گھٹ کر 41435.70 پوائنٹس پر آگیا اسی طرح 238.95 پوائنٹس کی کمی سے کے ایس ای30انڈیکس 21103.30پوائنٹس اور کے ایس ای آل شیئرز انڈیکس 29715.87پوائنٹس سے کم ہو کر29476.42 پوائنٹس پر بند ہوا ۔کاروباری مندی کا رجحان غالب آنے سے مارکیٹ کے سرمائے میں 71ارب 2کروڑ4لاکھ8ہزار4روپے کی کمی ریکارڈ کی گئی جس کے نتیجے میں سرمائے کا مجموعی حجم85کھرب64ارب 55کروڑ 44لاکھ 96ہزار 364روپے سے کم ہوکر 84کھرب 93ارب 53کروڑ40لاکھ 88 ہزار 360روپے رہ گیا ۔پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں جمعہ کے روز 5ارب روپے مالیت کے 12کروڑ 80لاکھ 57ہزار حصص کے سودے ہوئے جبکہ جمعرات کو 10ارب روپے مالیت کے 16 کروڑ17لاکھ43ہزار حصص کے سودے ہوئے تھے ۔پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں جمعہ کے روز مجموعی طور پر 360کمپنیوں کا کاروبار ہوا جس میں سے 141کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں اضافہ ،200میں کمی اور 19کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں استحکام رہا ۔کاروبار کے لحاظ سے ازگارڈ نائن 1کروڑ58لاکھ ،دوست اسٹیل لمیٹڈ 1کروڑ12لاکھ ،سوئی سدرن گیس 97لاکھ74ہزار ،بینک آف پنجاب 92کروڑ70لاکھ اور اینگرو پولیمر 68کروڑ81لاکھ حصص کے سودوں سے سرفہرست رہے ۔
قیمتوں میں اتار چڑھاؤ کے اعتبار سے میکٹر انٹر نیشنل کے بھاؤ میں 17.13روپے اور ہائی نون لیب کے بھاؤ میں 15.85روپے کا اضافہ جبکہ کولگیٹ پامولیو کے بھاؤ میں 97.99روپے اور سفائر ٹیکسٹائل کے بھاؤ میں 93.28روپے کی نمایاں کمی ریکارڈ کی گئی ۔

حصہ