افغان صوبے بدخشاں میں امریکی ڈرون حملے‘ 8افراد ہلاک‘ 15زخمی

65

کابل‘برسلز(آن لائن‘صباح نیوز) افغانستان کے شمال مشرقی صوبے بدخشاں میں نیٹو فورسز کے ڈرون حملے میں 8 افراد ہلاک ہوگئے۔افغان میڈیا کے مطابق افغان حکام نے دعویٰ کیا کہ نیٹو فورسز نے بدخشاں کے ضلع راغستان میں بغیر پائلٹ طیارے کے ذریعے میزائل حملہ کیا جس میں 15عسکریت پسند زخمی بھی ہوگئے۔ نیٹو کے ڈرون حملے میں طالبان کے ٹھکانوں کو نشانہ بنایا گیا جس کے نتیجے میں ان کے اسلحہ اور گولہ بارود کے ذخیرے کو بھی تباہ کردیا گیا۔افغان حکام نے بتایا کہ جائے وقوع سے 8 لاشیں ملی ہیں اور ان کے ہتھیاروں کا بڑا ذخیرہ بھی تباہ ہوگیا ہے۔ اس وقت بدخشاں کے 2اضلاع مکمل طور پر طالبان کے کنٹرول میں ہیں جبکہ دیگر 10 اضلاع میں فورسز اور عسکریت پسندوں میں جھڑپیں جاری ہیں۔غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق نیٹو چیف اسٹولن برگ نے کہا ہے کہ عالمی برادری دہشت گردی کے خلاف برسرپیکار ہے، ہم کسی قیمت پر بھی افغانستان کو عالمی دہشت گردی کی پناہ گاہ نہیں بننے دیں گے۔نیٹو جنرل سیکرٹری اسٹولن برگ نے رومانیہ میں4 روزہ نیٹوپارلیمانی اسمبلی کے اختتام پرخطاب کرتے ہوئے کہا کہ افغانستان میں قیام کرنے کی صورت میں ہونے والے جانی اور مالی نقصان سے آگاہ ہیں۔افغانستان سے چلے جانا اور قیام کی صورت میں ہونے والے نقصان سے زیادہ نقصان دہ ہوگا۔ نیٹو جلد افغانستان سے گیا تو افغانستان پرتشدد ریاست میں دوبارہ تبدیل ہوجائے گا اور افغانستان عالمی دہشت گردی کی محفوظ پناہ گاہ بن جائے گا۔

حصہ