عوام ملک کو اندھیرے میں دھکیلنے والے حکمرانوں کا محاسبہ کرے ، نواز شریف

48

وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف نے کہا ہے کہ بلوچستان سمیت تمام صوبوں میں ترقیاتی منصوبوں پر کام جاری ہے،تین سال پہلے والے حالات آج نہیں ہیں پاکستان کے اندر بہت بہتری آئی ہے اور خوشحالی بھی آرہی ہے،پاکستان استحکام کی راہ پر چلنے کے قابل ہو رہا ہے انشاء اللہ یہ سفر پورے زور و شور کے ساتھ جاری رہے گا ،ملک سڑکوں اور موٹرویز کے ذریعے مل رہاہے، بہت جلد ملک میں سستی بجلی دستیاب ہوگی،عوام ملک کو اندھیرے میں دھکیلنے والے حکمرانوں کا محاسبہ کرے۔ ماضی میں قومی ورثے پر توجہ نہیں دی گئی لیکن ہم شاہی قلعے سمیت تاریخی ورثے کی تزئین و آرائش کر رہے ہیں گریٹر اقبال پارک محض زمین کا ٹکڑا نہیں بلکہ تاریخی واقعات کو اپنے دامن میں سمیٹے ہوئے ہے،گریٹر اقبال پارک ترقی کا نمونہ ہے دھرنے کی جگہ نہیں ،وزیراعظم میاں محمد نواز شریف نے لاہور میں گریٹر اقبال پارک کا باضابطہ افتتاح کردیا جس کے بعد اسے عوام کے لیے کھول دیا گیا۔

pm-nawaz

افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم نے کہا کہ یہ زمین کا محض ایک ٹکڑا نہیں یہ وہ جگہ ہے جو تاریخ کے واقعات اور مستقبل کے امکانات کو اپنے دامن میں سمیٹے ہوئے ہیں ایک طرف بادشاہی مسجد ہے جو ہمارے عظیم ماضی کی نشانی ہے اور دوسری طرف مینار پاکستان ہے جو اس خواب کی یادگار ہے جو ایک شاندار مستقبل کے لیے ہمارے بزرگوں نے دیکھا تھا بادشاہی مسجد ایک ایسی شخصیت کی یاد دلاتی ہے جو ہماری عظمت رفتہ کی علامت ہے میرا اشارہ مزار اقبال کی طرف ہے وہ اقبال جو ہمارا ماضی بھی ہے اور ہمارا مستقبل بھی ہے۔

4-iqbal-park

وزیراعظم نواز شریف نے کہا کہ 23مارچ 1940کو یہاں جس منزل تک پہنچنے کا عزم کیا گیا تھا اس کی نشاندہی علامہ اقبال نے اپنے خطبہ الہ آباد میں کر دی تھی اور اقبال نے صرف منزل کا سراغ نہیں دیا وہ رہنما بھی دیا جو ہمیں اس منزل تک پہنچا سکتا تھا علامہ اقبال نے 1937میں قائد اعظم کو خط لکھا تھا جس میں اس بات کی طرف توجہ دلائی گئی تھی کہ یہ تنہا آپ ہی کی ذات ہے جو اس نازک مرحلے پر مسلمانوں کی رہنمائی کر سکتی ہے کہتے ہیں ولی ولی کو پہچانتا ہے یہاں ایک دانائے راز نے میر کارواں کو پہچان لیا تھا یعنی خواب  نے تعبیر کو پہچان لیا تھا۔

میاں محمد نواز شریف نے کہا کہ خوبصورت پارک کے اضافہ پر وزیراعلیٰ کی ٹیم مبارکباد کی مستحق ہے پارک میں چاروں صوبوں گلگت بلتستان اور آزاد کشمیر کی ثقافت اجاگر کرنا قابل تحسین ہے وزیر اعظم نے کہا کہ حفیظ جالندھری کا مزار بھی یہاں موجود ہے جنہوں نے قومی ترانہ لکھا جب میں پنجاب کا وزیر اعلٰی تھا تو ان کے مزار کی تعمیر کر کے ہم نے سعادت حاصل کی اب ان کا مزار مذید خوبصورت بنا دیا گیا ہے جس کے لیے شہباز شریف اور ان کی ٹیم کو دل کی گہرائیوں سے مبارکباد دیتا ہوں کہ ہم نے پاکستان کے اس محسن کو یاد رکھا اور ان کے مزار کو مذید خوبصورت بنایاجس قدر حفیظ جالندھری نے پاکستان کے لیے خدمات انجام دی ہیں ہم نے ان کے لیے کسی حد تک پے بیک کیا ہے۔

وزیراعظم نوازشریف کا کہنا تھا کہ موٹروے پہلی دفعہ لاہور سے ملتان ، ملتان سے سکھر جا رہی ہے لاہور سے ملتان والی 2018میں مکمل ہو جائے گی ملتان سے سکھر تک 2019میں مکمل ہو جائے گی پھر سکھر سے حیدر آباد موٹروے کا ٹینڈر ہونے والا ہے حیدرآباد سے کراچی زیر تعمیر ہے جو اگلے سال مکمل ہو جائے گی یہ چھ رویہ موٹروے ہے اس کوالٹی کی کئی شاہراہیں بلوچستان میں بن رہی ہیں سڑکوں پر بہت  بڑا بجٹ خرچ کر رہے ہیں ریلوے کی اپ گریڈیشن ہو رہی ہے اس پر سات بلین روپے خرچ کیے جا رہے ہیں بجلی کے منصوبے بڑی تیزی کے ساتھ مکمل ہو رہے ہیں پاکستان کے لیے بڑی خوشی کی بات ہے کہ چین جیسا ملک انقلابی سپیڈ کے ساتھ اپنے منصوبے کو مکمل کرنا ہے وہ پاکستان کی تعریف کر رہا ہے اس میں شفافیت اپنی مثال آپ ہے کم ازکم اخراجات پر یہ منصوبے تیار ہو رہے ہیں انشاء اللہ بہت سے منصوبے اگلے سال مکمل ہو جائیں گے۔

میاں محمد نواز شریف کا کہنا تھا کہ پارک کے توسیعی منصوبے پر کام کرنے والے کنٹریکٹر حبیب کنسٹرکشن سروسز کی جانب سے پروجیکٹ کی کل مالیت 98 کروڑ 10 لاکھ روپے بتائی گئی۔پارک میں ایک مصنوعی جھیل بھی تعمیر کی گئی ہے جو 4 ایکڑ کے رقبے پر پھیلی ہوئی ہے اور باغ کے بالکل مرکز میں موجود ہے، اس مقام پر حاضرین کو محظوظ کرنے کے لیے 800 فٹ اونچا میوزیکل فوارہ بھی نصب کیا گیا ہے۔لائبریری، اوپن ایئر جم اور فوڈ کورٹ کو بھی پارک کا حصہ بنایا گیا ہے جبکہ یہاں آنے والے لوگ خوبصورت آبشار کے اطراف میں چہل قدمی بھی کرسکتے ہیں جس کے چاروں طرف چاروں صوبے کی یادگار تعمیر کی گئیں ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ