اسپیکر نے تحریک استحقاق ہمارا موقف سنے بغیر مسترد کردی، شاہ محمود قریشی

88

پاکستان تحریک انصاف کے پارلیمانی لیڈر شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ سپیکر نے تحریک استحقاق کے حوالے سے ہمارا موقف سنے بغیر مسترد کردی جس سے ہماری دل آزاری ہوئی ہے۔

جمعرات کو قومی اسمبلی کے اجلاس کے دوران شاہ محمود قریشی نے کہا کہ اگر گزشتہ روز ہماری بات مان لی جاتی تو شاید نوبت احتجاج تک نہ آتی۔ انہوں نے کہا کہ چیئر کے احترام سے واقف ہوں‘ میں اس ایوان میں نیا نہیں آیا۔ میں نے اسپیکر کو نام لے کر مخاطب کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ سپیکر اس ایوان کا کسٹوڈین ہے‘ ہمیں توقع ہے کہ 80 لاکھ ووٹروں کے ترجمان کو بھی یہاں آواز بلند کرنے کا موقع ملنا چاہیے۔ حکومت ہمیشہ وسعت قلبی کا مظاہرہ کرتی ہے، وہ گنجائش ہمیں گزشتہ روز دکھائی نہیں دی۔ انہوں نے کہا کہ جمہوریت کے قافلے کو آگے بڑھانے کےلئے حکومت کی طرف سے وہ گنجائش ہمیں ملنی چاہیے تھی مگر سپیکر نے ہمیں موقع فراہم نہیں کیا۔

اگر اسپیکر غیر جانبدار رہیں گے تو وہ ہمارے اسپیکر رہیں گے۔انہوں نے کہا کہ وہ پارلیمانی روایات اور مشرقی تہذیب کے قائل ہیں۔ ہم محفل کے آداب اور پارلیمان کا تقدس سمجھتے ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ