پی آئی اے کا طیارہ حویلیاں کے قریب گرکر تباہ،47 مسافر سوار تھے

133

چترال سے اسلام آباد آنے والا پی آئی اے کا طیارے حویلیاں کے قریب گر کر تباہ ہو گیا ہے ۔ طیارے نے 4 بجکر 45 منٹ پر اسلام آباد پہنچنا تھا ۔ آئی ایس پی آر کا کہنا ہے کہ پاک فوج کے دستے اور ہیلی کاپٹرز کو جائے حادثہ کی طرف روانہ کردیا گیا ہے ۔ ڈی ایس پی حویلیاں نے طیارہ گرنے کی تصدیق  کر دی ہے ۔

ترجمان سول ایوی ایشن نے اس بات کی تصدیق کر دی ہے کہ چترال سے اسلام آباد آنے والا پی آئی اے کا طیارے حویلیاں کے قریب گر کر تباہ ہو گیا ہے ۔ ترجمان کے مطابق طیارے میں طیارے کے عملے مسافروں سمیت 47 افراد سوار تھے ۔ ذرائع سول ایوی ایشن کا کہنا ہے کہ پائلیٹ صالح جنجوعہ نے طیارے گرنے سے قبل مے ڈی کال کی تھی جس کا مقصد ہوتا ہے کہ اس کا طیارے سے کنٹرول ختم ہو گیا  ہے ۔ طیارے نے چترال سے 3 بجکر 48 منٹ پر اڑان بڑھی تھی ۔ ترجمان سوی ایوی ایشن کا کہنا ہے کہ طیارے نے 4 بجکر 45 منٹ پر اسلام آباد پہنچنا تھا ۔

ترجمان سول ایوی ایشن کے مطابق طیارے اے ٹی آر 661 کو کیپٹن پائلٹ صالح جنجوعہ اور کوپائلٹ احمد جنجوعہ اڑا رہے تھے ،

ترجمان آئی ایس پی آر کے مطابق جائے حادثہ پر ریسکیو آپریشن کے پاک فوج کے دستے اور دو ہیلی کاپٹرز کو جائے حادثہ کی طرف روانہ کر دیا گیا ہے ۔

دوسری طرف ڈی ایس پی حویلیاں نے نے تصدیق کی ہے کہ پاکستان آرڈیننس فیکٹری کے قریب کوئی طیارے گر کر تباہ ہوا ہے ۔ ڈی ایس پی کا کہنا ہے کہ جائے حادثہ سے دھویں کے بادل اٹھ رہے ہیں ۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ