موصل کا معرکہ اس سال ختم ہو جائے گا،عراق

110

عراقی وزیر اعظم حیدر العبادی نے پیش گوئی کی ہے کہ اس سال کے اواخر تک شہر کا کنڑول داعش سے واپس لے لیا جائے گا۔ ان کے خیال میں داعش میں عراقی فورسز کا مقابلہ کرنے کے لئے درکار جرات اور دم خم باقی نہیں رہا۔

ذرائع ابلاغ کی رپورٹس کے مطابق عراقی وزیر اعظم حیدر العبادی نے اس تاثر کی نفی کی ہے کہ داعش کے کنڑول سے واگزار کرائے جانے والے شہروں میں آبادیاتی تناسب متاثر ہوا ہے۔ادھر موصل آپریشن میں شریک فوج کی بین الاقوامی اتحادی طیاروں کی مدد سے شمالی موصل کے دو دیہاتوں السادہ اور بعویزہ پر داعش جنگجوؤں کا حملہ روکنے میں کامیابی حاصل کی اطلاعات سامنے آئی ہیں۔

نینوی گورنری کے سرکاری ذرائع نے بتایا ہے کہ عراقی فورسز اور داعش جنگجوؤں کے درمیان متذکرہ دیہات کے قرب وجوار میں جھڑپ ہوئی جس میں انتہا پسندوں کو بھاری نقصان ہوا۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ