خیبر پختونخوا حکومت نے عوامی مینڈیٹ کو دھرنوں کی نظر کردیا، اقبال ظفرجھگڑا

103

گورنر خیبر پختونخوا اقبال ظفر جھگڑا نے کہا ہے کہ خیبر پختونخوا حکومت کو مینڈیٹ عوام کی خدمت کے لئے ملا تھا مگر انہوں نے دھرنوں کی سیاست کو ترجیح دی، وفاقی حکومت کی آئینی مدت ختم ہونے سے قبل ملک سے توانائی کے بحران کا خاتمہ کر دیا جائے گا، دہشت گردی کے خاتمہ کے لئے پاک فوج کی سب سے زیادہ قربانیاں ہیں۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے بدھ کے روز کراچی پریس کلب کے دورے کے موقع پر صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ دھرنے والے ہمارے خلاف غیر مناسب زبان استعمال کرتے رہے اور ہم ان کو دعائیں دیتے رہے، ہم چاہتے تو خیبر پختونخوا میں حکومت بنا سکتے تھے مگر ہم نے جمہوری رویوں کو اپنایا۔

انہوں نے کہا کہ دھرنوں کی سیاست نے ملک کو سب سے زیادہ نقصان پہنچایا ہے وہاں کی حکومت کو عوام نے مینڈٹ اپنے مسائل کے حل کے لئے دیا تھا مگر انہوں نے عوامی خدمت کے بجائے دھرنوں کی سیاست کو ترجیح دی۔ انہوں نے کہا کہ ہم جمہوری لوگ ہیں اور جمہوری رویوں کو پسند کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ آمریت کے دور میں ہماری پارٹی کو ختم کرنے کی پوری کوشش کی گئی مگر آمر کو معلوم نہیں تھا کہ پاکستان کو پاکستان مسلم لیگ نے بنایا تھا جسے کبھی ختم نہیں کیا جاسکتا۔

انہوں نے کہا کہ دہشت گردی کے خاتمہ کے لئے مسئلہ مزاکرات کی ٹیبل پر لایا گیا مگر جب مسئلہ کا حل نہ نکلا تو ضرب عضب شروع کیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ دہشت گردی کے خاتمہ کے لئے پاک فوج نے سب سے زیادہ قربانیاں دی ہیں اور ملک کی معیشت کو مضبوط کرنے کے لئے وزیر خزانہ اسحاق ڈار کی کاوشیں سب سے زیادہ ہیں۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کی آئینی مدمت ختم ہونے سے قبل ملک سے توانائی کے بحران کا خاتمہ کر دیا جائے گا۔

ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ سی پیک منصوبہ خطے کی تقدیر بدلنے میں بنیادی کردار ادا کرے گا۔ اس موقع پر سینیٹر سلیم ضیاءاور مسلم لیگ (ن) سندھ کے عہدیداران ان کے ہمراہ تھے۔

قبل ازیں کراچی پریس کلب آمد پر صحافیوں نے ان کا پرتپاک استقبال کیا۔ کراچی پریس کلب کے صدر فاضل جمیلی نے انہیں سندھی اجرک کا تحفہ پیش کیا۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ