مکہ مکرمہ، حرم میں کرین گرنے سے87 افراد شہید، 184 حاجی زخمی

515

مکہ مکرمہ میں تعمیراتی کام کے دوران اچانک کرین کے گرنے سے 87 افراد شہید جبکہ 184 سے زائد حاجی زخمی ہوگئے۔

عرب ذرائع ابلاغ کے مطابق حرم میں توسیعی کام جاری ہے اور اسی دوران شدید بارش اور آندھی کے نتیجے میں کرین اچانک زمین پر گرگئی جس  کے نیچے دب کر  87 حاجی شہد ہوگئے ہیں جبکہ 184 سے زائد حاجی زخمی ہوگئے ہیں۔ کرین کے نیچے دب کر زخمی ہونے والے افراد کو اسپتال منتقل کردیا گیا ہے جبکہ مکہ مکرمہ میں طوفانی بارشوں کا سلسلہ بھی جاری ہے۔

عرب حکام کا کہنا ہے کہ حادثے میں زخمی ہونے والے افراد میں سے کچھ کی حالت تشویشناک ہے جس کے باعث شہیدوں کی تعداد میں اضافہ کا خدشہ ہے۔مکہ مکرمہ کے تمام اسپتالوں میں بھی ایمرجنسی نافذ کردی گئی ہے۔

بھارتی ذرائع ابلاغ کی جانب سے دعویٰ کیا گیا ہے کہ حرم شریف میں پیش آنے والے واقعے میں زخمی ہونے والے حاجیوں میں گیارہ  بھارتی شہری بھی شامل ہیں۔

 یاد رہے مکہ مکرمہ حرم شریف میں  توسیع کا کام  جاری ہے۔ مکرمکرمہ میں ان دنوں لاکھوں مسلمان فریضہ حج کی ادائیگی کے لئے دنیا بھر سے اس مقدس جگہ پرحاضر ہوتے ہیں ۔ اور اسی سلسلے میں پاکستانی عازمین حج کی بڑی تعداد بھی اس وقت حرم میں موجود ہے۔

حج کے موقع پر دنیا کے ہرحصے سے تعلق رکھنے والے مسلمان حج کی ادائیگی کے لئے سعودی عرب کا رخ کرتے ہے اور یہ مسلمانوں کا سب سے بڑا اجتماع ہوتا ہے جس میں ہر رنگ و نسل سے تعلق رکھنے والے مرد و زن اور بچے شامل ہوتے ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ